Friday, 1 August 2014

کیا الفاظ جذبات کے عکاس ہیں ؟

 

کیا الفاظ جذبات کے عکاس ہیں ؟

 



الفاظ جذبات کے ترجمان بن تو جاتے ہیں مگر یہ احساس کی مطلق عکاسی سے قاصر ہوتے ہیں. ہم الفاظ کو صرف انکے لغوی یا معاشرتی معنوں سے نہیں سمجھتے بلکہ ہر سننے والا ، الفاظ کو اپنی داخلی کیفیت سے سمجھنے کی سعی کرتا ہے. اب چونکہ ہر شخص کی داخلی کیفیت انفرادیت رکھتی ہے اور عمومی کیفیت سے اس کا تعلق مشابہت تک محدود ہوتا ہے لہٰذا یہ ممکن نہیں کہ بناء تجرباتی احساس کے آپ صرف الفاظ کی ادائیگی سے وہ تاثر قائم کرسکیں جو مطلوب ہے. ہاں یہ ضرور ہے کہ جو بات دل سے نکلتی ہے وہ اثر رکھتی ہے
.
لفظ تاثیر سے بنتے ہیں تلفظ سے نہیں
اہلِ دل آج بھی ہیں اہل زباں سے آگے
.
====عظیم نامہ====

No comments:

Post a Comment